Skip to content

مسرت کی پھدی – Dirty Sex Tales

موٹی نا پتلی چہرہ بھی خوبصورت ہے مردوں کو اپنی طرف کھینچ لینے کے تمام سودے موجود ہیں میرے شوہر نے میری سیل توڑی اور کافی سالوں تک میں اپنے شوہر کی ہی رہی پھر کچھ تین سال پہلے میرے جسم کو دیکھتے ہوئے ایک لڑکا بہت عاشق ہوا اور اس نے میری پھدی چودی ینگ لڑکا تھا چار پانچ بار ہی میں نے اس کے ساتھ کیا لن اچھا تھا سانسیں اکھاڑ دیتا تھا جب چدائی کرتا تھا میری تعریفیں کر کر کے اُس نے مجھے اپنے نیچے لٹایا تھا اور وہ پہلی بار میں نہی بھول سکتی جب شوہر کے علاوہ کسی اور کا لن پھدی میں گیا تھا تگڑا جوان لن موٹا تو اتنا نہیں تھا لیکن لمبا اور کڑک ضرور تھا اُس لڑکے سے کرنے کے بعد میرے اندر مزید خواہش جاگنے لگی وہ لڑکا امریکہ چلا گیا اور میں اب بور ہو رہی تھی تو میں نے فیصلہ کیا کہ کسی بندے سے تعلق بنایا جائے تو میری نظر میرے شوہر کے کزن مدثر پر جا رُکی اچھا خاصا جاندار بندہ ہے شادی شدہ ہے لیکن عاشق مزاج ہے اور کئی بار محسوس کیا کہ وہ میرے قریب ہونا چاہتا ہے میں نے فیصلہ کیا کہ مدثر سے تعلق بنا لیا جائے تو میں نے اس کے اشاروں کا مثبت جواب دینا شروع کیا تو ایک ھفتے کے اندر اندر مدثر نے موقع ملنے پر مجھے دبوچ لیا اور خوب چومنے لگا اور اپنے بازوؤں میں بھر کر خوب کسنگ کی میں نے پہلے ڈرامے کے طور پر غصہ کیا لیکن بعد میں اس کا ساتھ دینے لگ گئی مدثر نے کہا بھابھی ایک بار چانس دو پھر کبھی نہی کہونگا بہت دیر سے تمہارے پیچھے ہوں پاگل ہو گیا ہوں وغیرہ وغیرہ میں نے کہا پہلے مجھے چھوڑو پھر بات کروں گی اُس نے مجھے چھوڑ دیا تو میں نے کہا مدثر دیکھو میں ایسی ویسی نہیں ہوں لیکن تمہارے پیار کو دیکھ کر اتنا کرسکتی ہوں کہ تمہارے لن سے کھیل لیتی ہوں اس سے زیادہ کچھ نہی وہ بھی تمہاری خاطر تو مدثر بولا بھابھی مٹھ اور چوسا دونوں میں نے بنتے ہوئے کہا صرف مٹھ چوسا نہی ہاں اگر لن اچھا لگا تو پھر سوچوں گی لیکن آج نہی پھر جب موقع ملا تو وہ تین چار دن آتا رہا اور بات کسنگ اور جھپیوں تک ہی محدود رکھی میں نے میں اُس کو تڑپا رہی تھی وہ پینٹ شرٹ سے شلوار قمیض میں آنا شروع ہو گیا تاکہ کھڑا لن دکھا سکے پانچویں دن موقع ملا اور میں نے لن شلوار کے اوپر سے ہی پکڑ لیا اف کرنٹ سا دوڑ گیا کافی موٹا اور مضبوط لن ہے لمبائی بھی کچھ آٹھ انچ ہوگی لیکن موٹائی بہت زبردست ہے میں تو لن پکڑ کر ہی مچل گئی اُس نے لپس کسنگ کرنی شروع کردی اور میں شلوار کے اندر ہی مٹھ مارنے لگی تو مدثر بولا بھابھی باہر نکال کر کرو میں نے شلوار کا ناڑا کھول دیا اور لن میرے سامنے سلامی دینے لگا ہائے توبہ بہت زبردست لن ہے مدثر کا گندمی رنگ کا لن اور سب سے بڑی بات اُس کا ٹوپا کافی بڑا ہے مشروم کی طرح پھولا ہوا میں نے لن پکڑا تو جسم میں کرنٹ لگنے لگا مدثر نے پھر منہ میں منہ ڈال لیا اور کسنگ کرنے لگا اور ساتھ ہی شلوار کے اوپر سے ہی میری پھدی سہلانے لگا میں لن دبا دبا کر مٹھ مارنے لگی اب میری برداشت سے باہر ہو گیا تھا ایک لڑکے سے پھدی مروانے والی کب تک اتنا بڑا لن ہاتھوں میں رکھ سکتی تھی میں نے نیچے ہوتے ہوئے لن کو چومنا شروع کر دیا اور پھر چوسنے لگی مدثر خوش ہوگیا اور مجھے کہنے لگا بھابھی چوسا بہت زبردست لگاتی ہو بڑی ماہر لگتی ہو کیا پورن کلپس دیکھتی رہتی ہو میں چپ چاپ لن چوستی رہی پوری انگلش عورتوں کی طرح مدثر نے لن میرے منہ سے کھینچ نکالا میں نے کہا مدثر پلیز چوسنے دو مدثر بھی گھاک مرد ہے کہنے لگا پہلے یہ لن پھدی میں لوگی پھر چوسا لگانے دونگا میری تو پہلے ہی برداشت جواب دے رہی تھی میں نے شلوار اتار دی مدثر پیچھے سے آیا اور مجھے پکڑ کر بیڈ تک لے گیا اور مجھے بیڈ پر گھوڑی بنا دیا اور میری قمیض اوپر کو کرکے میرے چوتڑوں کو کھول کر میری پھدی کو دیکھا اور چاٹنے لگا میں مزے میں آنے لگی اُس نے پھدی چاٹی اور پھر لن کو پھدی پر رکھ کر ایک پُش کیا میری پھدی اَس کے لن سے کھُل گئی لن پرُچ کی آواز سے اندر گیا میں درد سے چیخی مدثر کا لن دونوں لنوں سے موٹا ہے اور سخت بھی ہے اُس لڑکے کا موٹا نہی تھا لیکن لمبا اور کڑک تھا مدثر سے بھی لمبا تھا لیکن مدثر کا لن بہت ڈیمرو ہے پھدی چیر کے جارہا تھا میں دل ہی دل میں صدقے جا رہی تھی کہ پہلی بار کوئی مرد میری پھدی کو پھاڑ کر چود رہا ہے وہ چدائی جو میں کلپس میں دیکھتی تھی وہ آج محسوس کر رہی تھی پھدی پوری طرح پھٹ رہی تھی مدثر نے لن پورا اندر کرکے میرے ہپس مضبوطی سے تھام لئے اور مجھے کہنے لگا کیسا ہے میرا لن میں نے بھی سچی بات بولتے ہوئے کہا بہت ڈیمرو لن ہے پھاڑ دی ہے میری پھدی مدثر نے میرے گورے چوتڑوں کو تھپڑ مارتے ہوئے کہا سالی کتنے نخرے کرتی تھی آج پھاڑ دی ہے بہت نخرے تھے تیرے اب بتا اب کر نخرے میں نے گردن گھما کے مدثر کو دیکھتے ہوئے کہا آج تو میرے سارے نخرے تیرے لن نے تباہ کردئے ہیں مدثر تجھے قسم ہے ایسے جھٹکے لگا کہ پھدی پھٹ جائے مدثر ٹھپ ٹھپہ ٹھپ چودنا شروع کر دیا میں واقع میں رونے لگی تکلیف برداشت نہیں ہورہی تھی مدثر جنونی بنا ہوا تھا میں نے ترلے منتیں کرنی شروع کردی مدثر پلیز ٹانگیں اٹھا کر پھدی چود لو گھوڑی بنا کر نہیں پلیز مدثر اور مدثر نے لن نکالا اور مجھے لٹا کر ٹانگیں کندھے پر رکھ کر لن پورا زور سے اندر کردیا میں تڑپی اور مدثر نے منہ میں منہ ڈال کر چودنا شروع کر دیا تھوڑی دیر بعد میں مزہ لینے لگی اور میں اس کے لن پر فارغ ہوئی اُس نے لن نکال کر صاف کیا اور پھر دوبارہ چودنے لگا پھر مدثر نے لن نکالا اور میرے ممے چودنے لگا اور ٹوپہ میرے منہ میں جانے لگا تھوڑی دیر بعد پھر ٹانگیں اٹھا لی اور بہت تیزی سے چودنے لگا میں پھر فارغ ہو گئی پہلی بار کسی بندے کے لن سے دو بار فارغ ہوئی تھی میں نڈھال ہوگئی لیکن مدثر چودتا گیا اور مجھے صحیح معنوں میں اپنی بنا لیا اور قریب مزید دس منٹ چدائی کے بعد میری پھدی منی سے بھر دی میں نڈھال ہوکر لیٹی رہی اور وہ میرے اوپر مجھے چومتا رہا لن نکلا تو منی بھی پھدی سے باہر آنے لگی مدثر مجھے کسنگ کرتے ہوئے پیار کرنے لگ گیا میں مدثر سے لپٹ گئی اور مدثر کو لپس کسنگ کرنے لگی مدثر نے کہا دو سال سے تیری پھدی چودنا چاہتا تھا لیکن تیرے تو نخرے بڑے تھے تو میں نے کہا جانتی ہوں میں لیکن مدثر آج تو تم نے سارے نخرے نکال دئے ہیں اب تو تم مجھے جب چلتی ہوئی دیکھو گے تو آنکھوں کے سامنے میرے ممے اور گانڈ ننگے نظر آئیں گے مدثر نے کہا مسرت وعدہ کر میرے علاوہ کوئی اور بندہ تیری پھدی کو ہاتھ بھی نہی لگائے گا سوا شوہر کے میں نے کہا مدثر ہاں آج کے بعد کوئی دوسرا ٹچ بھی نہی کرے گا پہلے جو ہوچکا وہ ہوچکا مدثر چونکا پہلے کیا ہوچکا میں سمجھا نہیں میں نے مدثر کا چہرہ ہاتھوں میں لے لیا اور کہنے لگی تجھ سے جھوٹ نہی بولوں گی اس لئے بتانا چاہتی ہوں کہ تجھ سے پہلے ایک لڑکے نے میری شادی شدہ چوت کی نتھ توڑی ہے مدثر حیران ہو گیا کیسے مسرت کیسے کون ہے وہ تو میں نے چہرہ چومتے ہوئے کہا کہ وہ اب امریکہ جا چُکا ہے ایک لڑکا ہے میری اس کے ساتھ سیٹنگ ہو گئی تھی مدثر نے پوچھا پھر تو لن بھی بڑا ہوگا میں نے کہا لن تجھ سے اور میاں دونوں سے لمبا ہے لیکن تیرے جیسا موٹا نہی ہے کڑک ہے کیلے کی طرح اوپر کو مڑتا ہے میرے میاں سے موٹا ہے جب اُس نے چودی تھی تب بھی مجھے پہلی بار اسی طرح درد ہوا تھا لیکن تم نے تو پھاڑ دی ہے اب میں بس تمہارے لن سے چدوں گی مدثر ابھی تک حیران تھا کہنے لگا مسرت کیسے اُس نے پہلی بار تجھے چودا تھا میں نے کہا اسی طرح منہ میں منہ ڈال کر ٹانگیں کندھے پر رکھ کر تو مدثر بولا ضرور بڑا کھلاڑی لڑکا ہے جانتا ہے کہ شادی شدہ پھدی کو اپنی مہر کیسے لگانی ہے میں نے کہا ہاں یار تھا تو ایسا ہی جب اُس نے پورا لن اندر کیا تھا تو میرے سانس اکھاڑ دئے تھے اوپر سے کیلے کی طرح شیپ لمبا بھی مدثر میں تو تڑپ گئی تھی مدثر نے میرا چہرہ پکڑ کر پوچھا سچی بتا اٗس وقت کیا محسوس کیا تھا میں نے کہا سچی اَس ٹائم تو اُس نے پھدی شوہر سے زیادہ کھول دی تھی کیونکہ وہ میرا پہلا یار تھا لیکن جو تم نے پھاڑ دی ہے وہ اُس سے بھی زیادہ ہے مدثر بولا سالی تجھے تو میں اب اپنے اک دوست سے چدواؤں گا پورا حبشیوں جیسا لن ہے تم نے ہمت کیسے کی مجھ سے پہلے پھدی میں اس لڑکے کا لن لینے کی میں نے کہا نہی مدثر صرف تم اور کوئی دوسرا نہی مجھے اب اپنی دوسری بیوی سمجھو تو مدثر خوش ہوگیا

This story مسرت کی پھدی appeared first on new sex story dot com

1 1 vote
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
Shani

03128467247